New Year Poetry Rahay Hijer mein ya Visal mein

Asad Rehman

Popular Reader
Dirham
0
Dinar
0
Rahay Hijer mein ya Visal mein


رہے ہجر میں یا وصال میں
تُو رہے جیسے بھی حال میں

نہ آئے لغزش تیری چال میں
تُو رہے خدا کی ڈھال میں

جو ابھی ہو تیرے خیال میں
تجھےسب ملے نئے سال میں

تیرے اپنے سارے قریب ہوں
اورمحبتیں بھی نصیب ہوں

جو رقیب ھیں وہ حبیب ہوں
وہ امیر ھوں جو غریب ہوں

رہے تیرا ستارہ کمال میں
تجھےسب ملے نئے سال میں

تیری سب دعائیں قبول ہوں
تُو نہ ہو تو سارے ملول ہوں

غم جو بھی آئیں فضول ہوں
نصیب خوشیوں کو طُول ہوں

تُو کبھی نہ آئے زوال میں
تجھے سب ملے نئے سال میں

جو خدا اور تیرے مابین ہوں
وہی تیرا نصب العین ہوں

تُو کبھی نہ آئے سوال میں
تجھےسب ملے نئے سال میں

تجھے فکر بھی ہو نماز کا
انجام ہو تیرے ہر آغاز کا

تجھے چلے پتہ اس راز کا
قبول ہونا ہے اس آواز کا

جو ندا ہو سوز و ملال میں
تجھےسب ملے نئے سال میں

تیرا ہاتھ دعا کو اٹھا کرے
تو میرے لئے بھی دعا کرے

جو چاہے تجھ کو ملا کرے
جا خدا تیرا بھی بھلا کرے

ہو ہر چاہت تیری فال میں
تجھےسب ملے نئے سال میں

Asad Rehman
More on my page at Pakistan Web
 
Thread starter Similar threads Forum Replies Date
Veer Discuss Urdu Novels & Afsanay 0
Top Bottom

Oops! AdBlocker Detected

ڈئیر ریڈر، مہربانی کرکے ریڈرز پر ایڈبلاکر ڈس ایبل رکھیں۔ شاید آپ کو معلوم نہ ہو مگر سپانسر اشتہارات کو دیکھ کر ہی آپ ہمیں سپورٹ کرتے ہیں۔ سپانسر اشتہارات سے ویب سائٹ کے اخراجات ادا کرنے میں تھوڑی مدد ملتی ہے، اسلئے گزارش ہے ابھی اپنے براؤزر کی ایڈبلاکر آپشنز میں جاکر ایڈبلاکر بند کر دیں، شکریہ

Okay, I understand. I've disabled AdBlocker.
I will disable later